Kuch Batain Kuch Yadain

User avatar
faisal.ghumman
Developer
Developer
Posts: 1772
Joined: 18 Apr 2015, 6:05 pm
Location: sialkot punjab
Contact:

Re: Kuch Batain Kuch Yadain

Post by faisal.ghumman » 22 Mar 2017, 6:42 pm

چشم ِ خُوش آب کی تَمثِیل نہیں ہو سکتی
ایسی شفّاف کوئی جِھیل نہیں ہو سکتی
میری فِطرت ہی میں شامِل ہے' مَحبّت کرنا
اَور فِطرت کبھی تبدیل نہیں ہو سکتی
اُس کے دِل میں مجھے اِک جَوت جگانا پڑے گی
خُود ہی روشن کوئی قندِیل نہیں ہو سکتی
سِکّہ ء داغ و زَر ِ غم سے بَھرا ہے مِرا دِل
دیکھ ' خالی مِری زَنبِیل نہیں ہو سکتی
اِس لیے شِدّت ِ صدمات میں رو دیتا ہُوں
مجھ سے جذبات کی تشکِیل نہیں ہو سکتی
دُکھ تو یہ ہے ' وہ مِرے دُکھ کو سمَجھتا ہی نہیں
اُس تک اَحساس کی ترسِیل نہیں ہو سکتی
چھوڑ آیا ہُوں ' تِرا دفتر ِ دَربار نُما
اب تِرے حُکم کی تعمِیل نہیں ہو سکتی
اِس کثافت کی لطافت سے بَھلا کیا نِسبت ؟
تِیرگی ۔۔ نُور میں تَحلِیل نہیں ہو سکتی
لازِمی تو نہیں ' ساحِر ! وہ مجھے مِل جائے
یعنی ' ہر خواب کی تکمِیل نہیں ہو سکتی
پرویز ساحِر

[attachment=0]8d19bb38697ab9191e85106d34cc0101.jpg[/attachment]
You do not have the required permissions to view the files attached to this post.
Suno Sab Ki Karo Mann Ki

User avatar
faisal.ghumman
Developer
Developer
Posts: 1772
Joined: 18 Apr 2015, 6:05 pm
Location: sialkot punjab
Contact:

Kuch Batain Kuch Yadain

Post by faisal.ghumman » 11 Sep 2018, 7:21 pm


اوّلیں چاند نے کیا بات سُجھائی مجھ کو
یاد آئی تری انگشتِ حنائی مجھ کو

سرِ ایوانِ طرب نغمہ سرا تھا کوئی
رات بھر اس نے تری یاد دلائی مجھ کو

دیکھتے دیکھتے تاروں کا سفر ختم ہوا
سو گیا چاند مگر نیند نہ آئی مجھ کو

انہی آنکھوں نے دکھائے کئی بھر پور جمال
انھیں آنکھوں نے شبِ ہجر دکھائی مجھ کو

سائے کی طرح مرے ساتھ رہے رنج و الم
گردشِ وقت کہیں راس نہ آئی مجھ کو

دھوپ اُدھر ڈھلتی تھی ، دل ڈوب اِدھر جاتا تھا
آج تک یاد ہے وہ شامِ جدائی مجھ کو

شہر لاہور تری رونقیں دائم آباد
تیری گلیوں کی ہوا کھینچ کے لائی مجھ کو !!

ناصر کاظمی

💕💕💕
Suno Sab Ki Karo Mann Ki

Post Reply